Home / Entertainment / وہ کام جو اکثر میاں بیوی کرتے ہیں مفتی نے حرام قرار دے دیا

وہ کام جو اکثر میاں بیوی کرتے ہیں مفتی نے حرام قرار دے دیا

آج کل کا جو دور چل رہا ہے اس دور میں طلاقیں بہت عام سی ہوگئی ہیں اس لیے میاں بیوی کو ایک دوسرے کو برداشت کرنا چاہئےاور حال ہئ میں عرب کے ایک مفتی نے فتوی جاری کردیا ہے کی ایک ایسا عمل ہے جو عوام روز کرتی ہے اس سے طلاق کی شرح بڑھ رہی ہے

اور لڑائیاں بھی مزید بڑھ رہی ہیں نہ صرف میاں بیوی بلکہ ہر طبقے کے لوگوں میں اس چیز کے بعد لڑائی ہورہی ہے آخر ایسا کیا ہے جو کرنے سے طلاق ہورہی ہے جاننے کے لیے اس اردو کے نیچے ایک ویڈیو ہوگی وہاں کلک کریں اور اس ک بعد نیچے اردو لکھی ہوگی وہ پڑھ لیں آپ بھی جان جایئنگے کیا کرنے

دبئی کے گرینڈ مفتی نے شوہر کے موبائل فون کی جاسوسی حرام قرار دیدی ابو ظہبی (ڈیلی پاکستان آن لائن ) دبئی کے گرینڈ مفتی نے شوہر کے موبائل فون کی جاسوسی کرنے کے عمل کو حرام قرار دیدیا ۔

پروپاکستانی کے مطابق دبئی میں اسلامک افیئرز اینڈ چیرٹیبل ایکٹیوٹیز ڈیپارٹمنٹ کے گرینڈ مفتی ڈاکٹر احمد مشائل نے حیران کن اور دلچسپ فتویٰ جاری کر تے ہوئے کہا ہے کہ اس قسم کی حرکات سے شادی شدہ جوڑے میں اعتماد کا فقدان پیدا ہوتا ہے

جس سے شکوک و شبہات اور بے یقینی پیدا ہوتی ہے اور آخر کار زندگی متاثر ہوتی ہے تاہم مسلمانوں کو اس قسم کے کاموں سے پرہیز کرنا چاہئیے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ بیوی کی طرف سے اپنے شوہر کے موبائل فون کی جاسوسی ایک ناپسندیدہ اور حرام عمل ہے جس سے اجتناب کیا جانا چاہئیے۔

ایک امریکی سروے کمپنی نے انکشاف کیاہے کہ 10میں سے ایک عورت اپنے شوہر کے فون کی جاسوسی کرتی ہے اور یہ عمل عام ہوتا جا رہا ہے جس کے پیش نظر مفتی کی جانب سے اس رویے کو حرام قرار دیا گیا ہے ۔ اس سے قبل اسی قسم کی خبر متحدہ عرب امارات سے بھی سامنے آئی تھی

جہاں ایک عورت کوخاوند کے موبائل فون سے ذاتی نوعیت کا ڈیٹا حاصل کرنے پر آئین کے آرٹیکل 212کے تحت جرمانے کی سزا سنائی گئی ہے مگر یہ نہیں بتایا گیا کہ کتنا جرمانہ کیا گیا ہے تاہم یہ خیال کیا جا رہا ہے کہ یہ جرمانہ 3لاکھ سے 5لاکھ درہم تک ہو سکتا ہے ۔

خاتون کے شوہر نے اجمان کورٹ میں درخواست دائر کی تھی جس میں کہا گیا تھا کہ اس کے موبائل فون سے بیوی نے کچھ تصاویر اپنے وٹس ایپ پر منتقل کیں جس پر خاتون کو سائبر کرائم قانون کے تحت سزا ہوئی ۔

بھارتی ماہرین بھی اعتراف کررہے ہیں کہ کشمیر کو اب زبردستی بھارت کے ساتھ نہیں رکھا جاسکتا،

About welivenews@4949

Check Also

ایک آدمی فجر کی نماز کیلئے بیدار ہوا۔۔

ایک آدمی فجر کی نماز کیلئے بیدار ہوا، تیار ہوکر مسجد کی جانب روانہ ہوا …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *